{غرباء اور یادِ الٰہی} – مصباح العرفان

حضرت محبوبِ ذاتؒ نے سخیٔ کاملؒ سے فرمایا کہ قیامِ مری کے دوران میرے دل میں خیال آیا کہ اس علاقہ کے لوگ عبادتِ الٰہی سے غفلت برتتے ہیں۔ بس اپنی دنیا میں ہی مگن رہتے ہیں۔ ہو سکتا ہے کہ غربت کی وجہ سے یہ غفلت ہو۔ لہٰذا کیوں نہ میں ان کی غربت کو دور کر دوں تاکہ یہ ذکرِ الٰہی میں دل لگا سکیں۔ میں نے اپنی تنخواہ لے کر ایک صندوقچی میں رکھی اور اعلان کرا دیا کہ جس کو جتنی رقم کی ضرورت ہو مجھ سے لے لے۔ لوگ آتے‘ اپنی حاجت کے مطابق رقم لے کر چلے جاتے۔ کافی دیر یہ سلسلہ چلتا رہا؛ لوگ آتے رہے‘ پیسے لے جاتے رہے۔ صندوقچی کی رقم ختم ہونے میں نہ آئی۔ پھر میرے دل میں خیال آیا کہ لوگوں کی مالی ضروریات بخوبی پوری ہونے اور میرے نصیحت کرنے کے باوجود مخلوق اپنے حال میں مست اور بدستور یادِ الٰہی سے غفلت میں ہے۔ لہٰذا میری اس کاوش کا کوئی فائدہ نہیں۔ لوگوں کو ان کے حال پر چھوڑ دینا چاہیے۔ میرے اس خیال کے بعد ایک آدمی آیا اور اس نے ایک روپیہ طلب کیا۔ میں نے بہت زور لگایا کہ زائد مانگو لیکن وہ نہ مانا۔ میں نے صندوقچی کھول کر دیکھا صرف ایک روپیہ اس میں پڑا تھا۔ میں نے وہ اسے دے کر آئندہ کے لیے یہ سلسلہ بند کر دیا۔

Advertisements
This entry was posted in محبوبِ ذات, مصباح العرفان, سیّد مبارک علی گیلانی and tagged , , , , , , , , , , , , , , , . Bookmark the permalink.

One Response to {غرباء اور یادِ الٰہی} – مصباح العرفان

  1. Haseeb UR REHMAN Qadri Mundirvi نے کہا:

    SUBHANALLAH
    HAZRAT MEHBOOB E ZAAT PAK SACHY MERBAN
    SONY MERBAN LAJPAL
    LAJPAL LAJPAL PIR AFZAL PIR AFZAL

اپنی رائے نیچے بنے ڈبے میں درج کر کے ہم تک پہنچائیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Connecting to %s