حکمت کے موتی – ملفوظاتِ محبوبِ ذات

حضرت محبوبِ ذات قدس سرہٗ العزیز کی کوئی بات حکمت سے خالی نہ ہوتی‘ بلکہ علم و دانش کی امین ہوتی۔ جو لوگ آپ کے وعظ اور گفتگو کو گوشِ عقیدت سے سماعت کرتے تھے‘ ان پر نا جانے کتنے اَسرار و رموز کھل جاتے تھے۔ آپ کا اٹھنا، بیٹھنا، کھانا، پینا، سونا، جاگنا، چلنا، پھرنا، سب رضائے خدا اور رضائے مصطفےٰ ﷺ کے لیے ہوتا تھا۔ آپ چلتے پھرتے سنت ِ رسولِ مقبول ﷺ کے پیکر تھے۔ آپ چلتے پھرتے درسِ حقیقت تھے۔ خوش نصیب ہیں وہ لوگ جنہوں نے ان کا دَور پایا۔ الحمد للہ‘ میرا شمار بھی انہی خوش نصیبوں میں ہوتا ہے۔

Advertisements
This entry was posted in ملفوظاتِ محبوبِ ذات, محبوبِ ذات and tagged , , , , , , , , , , , , , , . Bookmark the permalink.

اپنی رائے نیچے بنے ڈبے میں درج کر کے ہم تک پہنچائیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Connecting to %s