عشقِ الٰہی – ملفوظاتِ محبوبِ ذات

عشقِ الٰہی کا ایک اور واقعہ سرکارِ عالی قدس سرہٗ العزیز نے بیان فرمایا۔

اللہ تعالیٰ کا ایک عاشق پہاڑ کی غار میں محو ِ ذکر تھا اور عرصے سے روزہ بھی رکھا ہوا تھا۔ خیال آیا کہ حضرت موسیٰ علیہ السلام کے ہاتھ سے پانی لے کر روزہ افطار کروں گا۔ حسنِ اتفاق سے حضرت موسیٰ علیہ السلام اس کی ملاقات کے لیے تشریف لے آئے۔ اس عاشق نے اپنی تمنا کا اظہار کیا۔ حضرت موسیٰ علیہ السلام پہاڑ پر پانی لانے کے لیے گئے تو اُن کے پیچھے ایک شیر آیا اور اس نے بزرگ کو پھاڑ ڈالا۔ آپ جب واپس آئے تو آپ نے یہ دل سوز منظر دیکھا۔ آپ کو حیرت ہوئی۔ کوہِ طور پر جا کر بارگاہِ الٰہی سے اِس بزرگ کے بارے میں سبب جاننے کی التجا کی۔ ارشادِ باری ہوا کہ وہ میرا عاشق تھا، اُس کو غیر سے پانی کی خواہش کیوں پیدا ہوئی؟ اس کی عبادت کے پیشِ نظر میں نے اس کو انجام تک پہنچایا تاکہ پانی پینے سے اس کی عبادت ضائع نہ ہو جائے۔

Advertisements
This entry was posted in ملفوظاتِ محبوبِ ذات, محبوبِ ذات and tagged , , , , , , , , , , , , , , . Bookmark the permalink.

اپنی رائے نیچے بنے ڈبے میں درج کر کے ہم تک پہنچائیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Connecting to %s