عہدِ شباب – ملفوظاتِ محبوبِ ذات

عہدِ شباب

(1)    حضور سرکار عالی جوانی کے ایام میں تمام رات عبادتِ الٰہی میں مشغول رہتے۔ تمام دن ملازمت کے فرائض انجام دیتے۔ اکثر آنکھوں میں سرخ مرچیں ڈال لیتے تاکہ نیند نہ آئے۔ آپ کو سخت سردی کے موسم میں برف پر بیٹھ کر بھی یادِ الٰہی میں مصروف دیکھا گیا۔
(2)    ۱۹۱۴ء؁ میں حضور سرکار عالی نے تعلیم چھوڑ کر محکمہ واٹر ورکس سیالکوٹ میں ملازمت اختیار کر لی۔ ایک نئے تیار شدہ کنوئیں کی چیکنگ آپ کی ذمہ داری ٹھہری۔ آپ نے کوئیں میں نیچے جا کر ڈبکی لگائی اور ایک گھنٹے تک پانی کے اندر ہی رہے۔ اس پر لوگوں کو تشویش لاحق ہوئی لہٰذا آپ کی تلاش کے لئے غوطہ زن منگوائے گئے۔ وہ ابھی نیچے اترنے کا ارادہ کر ہی رہے تھے کہ آپ پانی کی سطح پر نمودار ہو گئے یہ دیکھ کر لوگ محو حیرت رہ گئے۔ بعض افراد انجانے خوف کی وجہ سے بھاگ گئے۔ آپ کنوئیں سے باہر آ کر اطمینان سے بیٹھ گئے اور لوگوں کو آواز دے کر پاس بلایا اور ان لوگوں کے سامنے پھر یہ عمل دہرایا۔ اُن پر جب آپ کی کرامت ظاہر ہو گئی تو آپ نے استعفیٰ دے کر گھر کی راہ لی۔

Advertisements
This entry was posted in ملفوظاتِ محبوبِ ذات, محبوبِ ذات and tagged , , , , , , , , , , , , , , . Bookmark the permalink.

اپنی رائے نیچے بنے ڈبے میں درج کر کے ہم تک پہنچائیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Connecting to %s